Home / اہم خبریں / سانحہ مچھ،وزیراعظم کسی بھی وقت اچانک کوئٹہ کادورہ کرسکتے ہیں،سکیورٹی وجوہات کی بناپر دورے کا اعلان نہیں کیا جائے گا،ذرائع
سانحہ مچھ،وزیراعظم کسی بھی وقت اچانک کوئٹہ کادورہ کرسکتے ہیں،سکیورٹی وجوہات کی بناپر دورے کا اعلان نہیں کیا جائے گا،ذرائع

سانحہ مچھ،وزیراعظم کسی بھی وقت اچانک کوئٹہ کادورہ کرسکتے ہیں،سکیورٹی وجوہات کی بناپر دورے کا اعلان نہیں کیا جائے گا،ذرائع

اسلام آباد : وزیراعظم عمران خان نے کوئٹہ کا دورہ کرنے کااصولی فیصلہ کرلیا ، ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم کسی بھی وقت اچانک کوئٹہ پہنچ سکتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے دورہ کوئٹہ کا اصولی فیصلہ کرلیا ، دورے کا اعلان سیکیورٹی وجوہات کی وجہ سے نہیں کیا جائے گا ، کابینہ کا کہنا ہے کہ وزیراعظم کے دورے کا دن ،وقت خفیہ رکھاجائے گا، وزیراعظم کسی بھی وقت اچانک کوئٹہ پہنچ سکتےہیں۔

گذشتہ روز وزیراعظم عمران خان نے اپنے بیان میں کہا کہ مچھ واقعے کے لواحقین سے درخواست کی تھی اپنے پیاروں کی تدفین کریں، آپ کادردسمجھتاہوں ، ہزارہ برادری کو یقین دلاتاہوں ان کے دکھ اور مطالبات کااحساس ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ پہلے بھی چل کرآپ کے پاس آیا تھا اور دکھ میں ساتھ کھڑاتھا، بہت جلدکوئٹہ آکرشہداکےلواحقین سےتعزیت اور فاتحہ خوانی کروں گا، کبھی اپنےعوام کابھروسہ نہیں توڑوں گا۔

بعد ازاں وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز نے اے آر وائی کے پروگرام الیونتھ آور میں گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ کوئٹہ واقعہ دلخراش ہے،پوری قوم کوواقعےپرافسوس ہے لواحقین کی دادرسی کےلیےوزیراعظم عمران خان ضرورجائیں گے، صبح تک وزیراعظم عمران خان کےکوئٹہ جانےکابتا دیا جائے گا۔

ہزارہ برادری کامطالبہ ہےبلوچستان حکومت مستعفی ہوجائے، وزیراعلیٰ بلوچستان بھی مظاہرین کےپاس اظہاریکجہتی کیلئےگئےتھے، بلوچستان حکومت ہزارہ برادری کی بھرپورمددکرےگی۔

خیال رہے وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال مذاکرات کیلیے ہزارہ برادری کے دھرنے میں پہنچے تھے اور مچھ واقعےمیں جاں بحق افرادکے لواحقین سے تعزیت کی ، قاسم سوری،علی زیدی ، زلفی بخاری بھی وزیراعلیٰ بلوچستان کے ہمراہ تھے۔

دھرنا کمیٹی میتوں کی تدفین پر راضی نہ ہوسکی تھی اور وزیراعظم عمران خان کی آمد کے مطالبے پر برقرار رہی۔

About admin

اپنا پیغام دیں

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Scroll To Top